جنازہ نبی کریم: اہل سنت کتب (ثبوت 2)

تاریخ کی سب سے معتبرترین کتاب ’’تاریخ ابن خلدون‘‘ ۔۔۔ میں بھی اس بات کا ثبوت موجود ہے کہ نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کی جنازہ کی نماز تمام صحابہ رضہ (مردوں عورتوں اور بچوں) نے ادا کی۔
نوٹ: ایک بات کی میں وضاحت کرتا چلوں وہ یہ کہ ہو سکتا ہے کوئی یہ کہہ دے کہ جنازہ کی نماز عورتوں پر فرض نہیں تو یہ جنازہ عورتوں نے کیسے ادا کیا۔
تو اس کا جواب یہ ہے کہ بے شک جنازہ کی نماز عورتوں پر فرض نہیں ہے۔ لیکن نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کا جنازہ مبارک اس طرح ادا نہیں کیا گیا جس طرح عام لوگوں کا ادا کیا جاتا ہے۔ نبی صلی اللہ علیہ وسلم کی جنازہ مبارک میں نہ کوئی امام بنتا تھا نہ کوئی مغفرت کی دعا کی جاتی تھی جس عام جنازوں میں ہوتی ہے۔ بلکہ اس میں صرف اور صرف درود پاک پڑھا جاتا تھا اور یہی نماز جنازہ تھا۔
کتاب کا عکس 👇👇👇